آڈٹ کیا ہوتا ہے؟

آڈٹ کیا ہوتا ہے؟
کمپنی کے مالک چونکہ براہ راست بزنس میں انوالو نہیں ہوتے اورکمپنی میں ڈائریکٹرز کی زیر نگرانی ہی کا روبار چل رہا ہوتا ہے تو ممبرز اور مینجمنٹ کے درمیان اختلاف پیدا ہو سکتا ہے۔اس اختلاف سے بچنے کے لیے قانون نے آڈٹ کا طریقہ متعارف کروایا ہے۔آڈٹ کمپنی کے مالی معاملات کا بھی ہو سکتا ہے اور آپریشنل امور سے بھی متعلق ہو سکتا ہے۔ بنیادی طور سے آڈٹ دو طرح سے کیا جا سکتا ہے:

مزید پڑھیے۔۔۔

وژن: کامیابی کا استعارہ

’’میں دنیا کا کامیاب ترین انسان بننا چاہتا ہوں۔ میری خواہش ہے میرا کاروبار پوری دنیا میں پھیلا ہوا ہو۔ دولت، عزت، شہرت اور دنیا بھر کی سہولیات میرے قدموں میں ہوں۔ قسمت ایسی ہو کہ مٹی ہاتھ میں لوں تو سونا بن جائے۔‘‘یہ الفاظ آج کے دور میں کسی بھی شخص کے خیالات اور خواہشات کی نمائندگی کر سکتے ہیں۔ تاہم ایسے خواب کی تعبیر پانے کے لیے پہلے خواب دیکھنا ضروری ہے۔ جسے مینجمنٹ کی اصطلاح میں ’’وژن‘‘ کہتے ہیں۔ آئیے! اپنے مستقبل کی خاطر وژن سے متعلق جانتے ہیں۔

مزید پڑھیے۔۔۔

کاروبار کی5اہم بنیادیں

کوئی بھی کاروبار یا کام شروع کرنے سے پہلے مندرجہ ذیل 5امور پر توجہ دینا نہایت ضروری ہے۔ بلا سوچے سمجھے اور وسائل کو ترتیب دیے بغیر چھوٹے یا بڑے منصوبے کو عملی جامہ پہنانا مشکل ہوتا ہے۔ اگر کوئی منصوبہ شروع کر بھی دیا جائے تو وہ ناکامی کا منہ ہی دیکھتا ہے۔ پانچ اہم اصول یہ ہیں:

مزید پڑھیے۔۔۔

میڈیکل بزنس :چند بے اعتدالیاں

’’میڈیکل‘‘ جو کہ وطن عزیز کا ایک انتہائی اہم اور حساس شعبہ ہے،بدقسمتی سے معاشرے میں اس طبی پیشے (Medical Profession)میں بے شمار بے اعتدالیاں اور کوتاہیاں اس کا ناگزیر حصہ بن گئی ہیں۔ان میں سے کئی خرابیاں ایسی ہیں جو ایک مادی معاشرے میں بھی معیوب ہی سمجھی جاتی ہیں، ان کا مذاکرہ ضروری ہے، تاکہ ہمارے معالج، میڈیسن بنانے والے اور فارمیسی کے حضرات خالص انسانی فلاح و بہبود کے جذبے کے تحت ان سے گریز کرتے ہوئے اپنی اصلاح فرمالیں۔

مزید پڑھیے۔۔۔

امانت و دیانت

’’جس میں امانت کا جوہر نہیں، اس کا دین بھی نہیں۔‘‘ یہ ایک حدیث پاک کا مفہوم ہے۔ مسلمان بنیادی طور پر دین دار ہوتا ہے اور دین کا تقاضا ہے کہ وہ ہمیشہ اور ہر معاملے میں اسلام کی خوبی ’’امانت‘‘ کا پاس دار بھی ہو۔ یہ خوبی ہر مسلمان میں ہونا ضروری ہے۔ کیونکہ ایک حدیث پاک کے مفہوم کے مطابق ہر مسلمان ذمہ دار ہے۔ اور اس سے اس ذمہ داری کے بارے میں پوچھ ہو گی۔ صاف ظاہر ہے کہ پوچھ اس امانت کے بارے میں ہی ہو گی کہ ہم نے آپ کو امانت کا بوجھ دیا اور آپ نے اس پر کیا عمل کیا؟

مزید پڑھیے۔۔۔

اسلامی معیشت اور رزقِ حلال

اسلام نے مثبت طور پر رزق کی جد و جہد کی ترغیب دی ہے اور اسے ہر مسلمان پر فرض کیاہے۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ’’جب تم فجر کی نماز پڑھ لو تو اپنی روزی کی تلاش سے غافل ہو کر سوتے نہ رہو۔‘‘ آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ’’جو شخص دنیا کو جائز طریقے سے حاصل کرتا ہے کہ سوال سے بچے اور اہل و عیال کی کفالت کرے اور ہمسائے کی مدد کرے تو قیامت کے دن جب وہ اُٹھے گا تو اُس کا چہرہ چودھویں کے چاند کی طرح روشن ہو گا۔

مزید پڑھیے۔۔۔