پاکستان میں معیشت کو سود سے پاک کرنے کی کوششیں

مولانا شیخ نعمان

اس قدرآج 2016ء میں جب اسلامی بینکاری کی بات کی جاتی ہے۔ جب یہ کہا جاتا ہے کہ معیشت کو سود سے پاک ہونا چاہےے، تو فوراً ایک سوال ہمارے ذہنوں میں ابھرتا ہے کہ آج پاکستان کو بنے ہوئے 68 سال ہو گئے ہیں۔ پاکستان ایک اسلامی ملک ہے۔ اگر سود اتنی ہی بری چیز ہے تو پھر پاکستان بننے کے فوراً بعد یہ برائی ختم کیوں نہ ہو گئی؟ کئی بار یہ بات بھی کانوں کو سنائی دیتی ہے کہ بانی پاکستان محمد علی جناح کا خواب ایک آزاد ملک تھا جس میں کسی مذہبی اقدار کے بغیر آزادانہ زندگی گزارنا مقصود تھا۔ محمد علی جناح کا خواب کوئی اسلامی اقدار کی بنیاد پر ملک نہ تھا۔ بعد میں آنے والے لوگوں نے پاکستان کے آئین کو یرغمال بنا کر اس میں اسلامی دفعات ڈلوا دی ہیں۔ لہذا پاکستان ایک آزاد ملک ہے، جس کی کوئی مذہبی بنیاد نہیں۔ حکمران اور عوام جس طرح چاہیں اس ملک کو چلائیں اور اس کا آئین بنائیں۔ لہذا معیشت کو سود سے پاک کرنے کی بات اس کی آزاد خیالی کے خلاف ہے۔ اسی لیے سود رائج ہے اور رائج رہے گا۔ چند لوگوں کے کہنے سے ہم عالمی معاشی نظام سے بغاوت نہیں کر سکتے۔

مزید پڑھیے۔۔۔

ایک مثالی منیجر ایسا ہوتا ہے

ونسٹن چرچل سے کون شخص واقف نہیں۔ دوسری جنگ عظیم کے دوران وہ برطانیہ کے وزیر اعظم رہے۔ ماہرین کہتے ہیں کہ وہ بیسویں صدی میں جنگ کے دوران ملک کی قیادت سنبھالنے والے دنیا کے سب سے بڑے لیڈر تھے۔ ان کا کارنامہ صرف یہی نہیں تھا کہ ہٹلر جیسے طاقت کے دیو کو خاک چاٹنے پر مجبور کیا بلکہ وہ بہت بڑے ادیب اور قلم کار بھی تھے۔ انہیں ادب میں نوبل انعام سے بھی نوازا گیا۔

مزید پڑھیے۔۔۔

بزنس میٹنگ

اہمیت، ناکامی کی وجوہات، کامیابی کے گُر کسی مسئلے کو حل کرنے یا کوئی ہدف حاصل کرنے کے لیے مخصوص لوگوں کے جمع ہونے کا نام میٹنگ ہے۔ اگر وہ مسئلہ تجارت سے متعلق ہو، مثلاً: کمپنی کی پیداوار کی فروخت کے لیے ہو، خام مال (Raw Material) کی خریداری سے متعلق ہو یا مارکیٹ میں آنے والے نئے حریف (competitor) سے مقابلہ کرنے سے متعلق ہو، تو اس طرح کے مسائل کے حل کے لیے مینجمنٹ، بورڈ آف ڈائریکٹرز اور پریذیڈنٹ وغیرہ کے جمع ہونے کا نام ’’بزنس میٹنگ‘‘ ہے۔

مزید پڑھیے۔۔۔

ملازمین کو تربیت کیسے دیں؟

چند بنیادی اصول کسی بھی کمپنی کی ترقی کا انحصار اس میں کام کرنے والے ملازمین پر ہوتا ہے۔ اگر ملازمین اچھے طریقے سے اپنا کام سر انجام دیں تو ملازمین اور کمپنی دونوں کی ترقی ہو گی۔ ملازمین کی تربیت اور ٹریننگ اس میں بنیادی کردار ادا کرتی ہے۔ مسلسل تربیت ملازمین کو رفتہ رفتہ پروفیشنل بنا دیتی ہے۔ آئیے! ملازمین کو دی جانے والی تربیت کا ایک فنی اور تجرباتی مطالعہ کرتے ہیں۔ پہلے ٹریننگ کی مختلف اقسام سمجھ لیں:

مزید پڑھیے۔۔۔

ترغیب یوں دیں

ہر کمپنی کی خواہش ہوتی ہے کہ ملازمین کو خوش رکھے۔ ملازمین کو خوش رکھنے کے لیے مختلف ترغیبات دی جاتی ہیں۔ یہ ترغیبات پیسے یا انعام کی شکل میں بھی ہوسکتی ہیں اور حوصلہ افزائی اور ہمت افزائی کی شکل میں بھی۔ کسی بھی ملازم کو کام پر آمادہ کرنے کے حوالے سے مختلف نکتہ ہائے نظر پائے جاتے ہیں:

مزید پڑھیے۔۔۔

ملازمین کو ترغیب دینے کے مختلف طریقے

یہ ایک امریکی کمپیوٹر کمپنی کی داستان ہے۔ امریکا جیسے ملک میں نیا کاروبار شروع کرنا اور پھر اسے کامیاب بنانا جان جوکھوں کا کام ہے۔ فارچون کمپیوٹرز کو بھی اسی مشکل کا سامنا تھا۔ ایک طرف حریف کمپنیوں نے اجارہ داری قائم کررکھی تھی، دوسری طرف کمپنی کی مالی حالت دن بہ دن خراب ہورہی تھی۔ مالکان سرجوڑ کر بیٹھے۔ فیصلہ کیا کہ ایک سال کے دوران فروخت میں کم از کم 15 فیصد اضافہ کیا جائے گا۔ دوسرا فیصلہ یہ ہوا کہ کم ازکم 25 فیصد نئے گاہک پیدا کیے جائیں گے

مزید پڑھیے۔۔۔