وعدۂ بیع کے اخراجات کی تلافی ممکن نہیں

میرا نام رضوان سلیم ہے، میں نے آج سے تین ماہ پہلے امتیاز نامی شخص کے ساتھ ڈیل کی تھی جس میں، میں نے پچاس ہزار روپے ایڈوانس کے طور پر امتیاز کو دیے تھے اور ڈیل یہ تھی کہ امتیاز 200 من (دھان) چاول مونجی کی قسم سوپری جو 6 ایکڑ رقبہ زمین پر لگی ہوئی ہے۔ اس نے کہا کہ میں 200 من مونجی کا بندوبست کر دوں گا۔ اگر کچھ کمی ہوئی تو اپنے قریب واقف لوگوں سے لے کر آپ کو دے دوں گا، اس کی آپ فکر نہ کریں۔ اس فصل کا میوہ پک چکا تھا اس نے مجھے نمونہ بھی دکھایا تھا، لیکن اس کی کٹائی پر کچھ وقت (30 یا 35 دن) لگنا تھا، اور ریٹ کے بارے میں یہ طے ہوا کہ مونجی حوالگی کے وقت مارکیٹ ریٹ سے 10 فیصد کم ہی قیمت ہو گی۔ اس کا ایڈوانس 50 ہزار روپے میں دے چکا تھا۔

مزید پڑھیے۔۔۔

متعدد اثاثوں میں شراکت پر بٹوارے

متعدد اثاثوں میں شراکت پر بٹوارے کی صورت کیا ہو؟ 1971 ء میں ہمارے والد صاحب، چاچا اور پھوپھا نے 25 ہزار سے ڈیکوریشن (ٹینٹ) کا کاروبار شروع کیا۔ اس وقت میرے ابا (محمد علی) اور چاچا نوکری کر رہے تھے۔ کچھ عرصہ میں والد صاحب کا ٹرانسفر حیدر آباد ہو گیا۔ میری عمر 12 سال تھی۔ کاروبار کے چلنے کے کچھ عرصے بعد پھوپھا سے لئے گئے 25 ہزار انہیں لوٹا دیے اور وہ ہمارے ساتھ ورکنگ پارٹنر بن گئے۔

مزید پڑھیے۔۔۔

سودی ادارے سے وابستہ شخص سے حق کی وصولی

سوال: کیا فرماتے ہیں مفتیان عظام اس مسئلے کے بارے میں کہ زید نے کوئی چیز عمر کو فروخت کی۔ عمر کسی سودی ادارے سے وابستہ ہے، لہذا عمر نے اس چیز کی قیمت زید کو ادا کر دی۔ آیا اب زید کے لیے اس رقم سے نفع اٹھانا جائز ہے یا نہیں، جبکہ یہ قاعدہ بھی ہے کہ ملکیت کے بدلنے سے عین بھی بدل جاتی ہے۔ مفصل رہنمائی فرما کر مشکور ہوں۔ جزاک اللہ خیرا۔ (محمد حذیفہ)

مزید پڑھیے۔۔۔

مارکیٹ میں حرام گوشت کی فروخت

مسائل مارکیٹ میں حرام گوشت کی فروخت سوال:کراچی میں کچھ عرصہ پہلے ایک قصائی کو گدھا ذبح کرتے ہوئے ایک پرائیویٹ میڈیا والوں نے پکڑا تھا اور وہ بڑی ڈھٹائی سے کہہ رہا تھا کہ میں کوئی حرام کام نہیں کر رہا اور یہ کہ گدھے کا گوشت حلال ہے۔ تو ان حالات میں ہم کراچی والے کن لوگوں سے بڑا گوشت خریدیں، جبکہ حکومت کی طرف سے بھی کوئی کارروائی سامنے نظر نہیں آ رہی ہے۔ (محمد یاسر حبیب)

مزید پڑھیے۔۔۔

درہم اور روپے کا تبادلہ کیسے ہو گا؟

سوال:کیا فرماتے ہیں علمائے کرام و مفتیان شرع متین اس مسئلے میں کہ عبد اللہ نے عمر سے ایک لاکھ درہم خریدا (فی درہم ستائیس 27 روپے کے حساب سے) عبد اللہ پاکستان میں ہے اور عمر دوبئی میں ہے۔ عبد اللہ نے کوئٹہ میں عمر کے اکاؤنٹ میں درہم کی قیمت جمع کر لی (جو کہ 27 لاکھ روپے ہیں) اور عمر نے دوبئی میں عبد اللہ کے اکاؤنٹ میں درہم جمع کیا۔ اب پوچھنا یہ ہے کہ عبد اللہ اس درہم کو اگر نقد بیچ دے تو فی درہم 27 روپے کے حساب سے سے بک جاتا ہے جو کہ مارکیٹ کا نقد ریٹ ہے۔

مزید پڑھیے۔۔۔

جائیداد کی قسطوں پر خرید وفروخت

سوال:کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام وعلمائے دین متین اس مسئلے میں کہ زید، عمر اور بکر تین دوست ہیں۔ زید کو ایک مکان کی ضرورت ہے جس کی قیمت بیس لاکھ ہے۔ زید کے پاس صرف پانچ لاکھ روپے ہیں۔ زید نے عمر اور بکر سے کہا کہ یہ مکان بیس لاکھ پر مشترکہ طور پر خریدتے ہیں، پھر آپ دونوں اپنا اپنا حصہ مجھ پر کچھ منافع کے ساتھ فروخت کریں، قسطوں پر۔ چنانچہ عمرہ نے دس لاکھ اور بکر نے پانچ لاکھ دے کر، زید نے اپنا پانچ لاکھ ملا کر بیس لاکھ پر مکان خرید لیا۔ پھر زید نے عمر اور بکر سے ان کا حصہ خرید لیا قسطوں پر ۔اس طرح کہ عمر سے اس کے دس لاکھ کا حصہ بارہ لاکھ پر اور بکر سے اس کا پانچ لاکھ کا حصہ چھ لاکھ پر، تو اب یہ سودا جائز ہے یا نہیں؟

مزید پڑھیے۔۔۔